Koi Poche Tu Na Kehna K Abhi Zinda Hoon

کوئی پوچھے تو نہ کہنا کہ ابھی زندہ ہوں

کوئی پوچھے تو نہ کہنا کہ ابھی زندہ ہوں

وقت کی کوکھ میں اک لمحۂ آئندہ ہوں

زندگی کتنی حسیں کتنی بڑی نعمت ہے

آہ میں ہوں کہ اسے پا کے بھی شرمندہ ہوں

کیا ادا ہونے کو ہے سنت ابراہیمی

آگ ہی آگ ہے ہر سمت مگر زندہ ہوں

زندگی تو جو سنے گی تو ہنسی آئے گی

میں سمجھتا ہوں کہ میں تیرا نمائندہ ہوں

تیز رفتار ہواؤں کے لبوں سے پوچھو

حرف آخر ہوں میں اک نغمۂ پائندہ ہوں

اجنبی جان کے ہر شخص گزر جاتا ہے

اور صدیوں سے اسی شہر کا باشندہ ہوں

جانے کن تیز اجالوں میں نہایا تھا کبھی

اس قدر سخت اندھیروں میں بھی تابندہ ہوں

منظور ہاشمی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1153) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Manzoor Hashmi, Koi Poche Tu Na Kehna K Abhi Zinda Hoon in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 18 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.9 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Manzoor Hashmi.