Nahi Tha Koi Sitara Tere Barabar Bhi

نہیں تھا کوئی ستارا ترے برابر بھی

نہیں تھا کوئی ستارا ترے برابر بھی

ہوا غروب ترے ساتھ تیرا منظر بھی

پگھلتے دیکھ رہے تھے زمیں پہ شعلے کو

رواں تھا آنکھ سے اشکوں کا اک سمندر بھی

کہیں وہ لفظ میں زندہ کہیں وہ یادوں میں

وہ بجھ چکا ہے مگر ہے ابھی منور بھی

عجب گھلاوٹیں شہد و نمک کی نطق میں تھی

وہی سخن کہ تھا مرہم بھی اور نشتر بھی

منافقوں کی بڑی فوج اس سے ڈرتی تھی

اور اس کے پاس نہ تھا کوئی لاؤ لشکر بھی

منظور ہاشمی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(782) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Manzoor Hashmi, Nahi Tha Koi Sitara Tere Barabar Bhi in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 18 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.3 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Manzoor Hashmi.