Jaye Ga Dil Kahan Ho Ga Yahin Kahin

جائے گا دل کہاں ہوگا یہیں کہیں

جائے گا دل کہاں ہوگا یہیں کہیں

جب دل کا ہم نشیں ملتا نہیں کہیں

یوں اس کی یاد ہے دل میں بسی ہوئی

جیسے خزانہ ہو زیر زمیں کہیں

ہم نے تمہارا غم دل میں چھپایا ہے

دیکھا بھی ہے کبھی ایسا امیں کہیں

میری دراز میں ہے اس کا خط دھرا

اٹکا ہوا نہ ہو دل بھی وہیں کہیں

ہے اس کا خط تو بس سیدھا سپاٹ سا

ہاں دل لگی بھی ہے اس میں کہیں کہیں

جتنا وہ دل ربا اتنا ہی بے وفا

دل کو ملا ہی کیوں ایسا حسیں کہیں

احمدؔ یہ دل مرا کیوں ہے بجھا بجھا

دل سے خفا نہ ہو دل کا مکیں کہیں

محمد احمد

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(478) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Mohammad Ahmad, Jaye Ga Dil Kahan Ho Ga Yahin Kahin in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 28 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.2 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Mohammad Ahmad.