Raakh Kuch Dil Main Ziyada Hai Sharara Kam Hai

راکھ کچھ دل میں زیادہ ہے شرارا کم ہے

راکھ کچھ دل میں زیادہ ہے شرارا کم ہے

ہم نے اس آئنے میں عکس اتارا کم ہے

روشنی آج عجب تیرگئ خاک میں ہے

آسماں دیکھ ترا ایک ستارا کم ہے

ڈھونڈھتا پھرتا ہوں خار و خس و خاشاک میں حسن

میری بینائی کو سوغات نظارا کم ہے

مرگ یاران سخن سنج پہ خوں روتا ہوں

کیا کروں صبر کہ اب صبر کا یارا کم ہے

تم کو اندازۂ سیلاب نہیں ہے محسنؔ

بادلوں نے جو کیا کیا وہ اشارا کم ہے

محسن احسان

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(332) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Mohsin Ehsan, Raakh Kuch Dil Main Ziyada Hai Sharara Kam Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad, Social Urdu Poetry. Also there are 35 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.3 out of 5 stars. Read the Sad, Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Mohsin Ehsan.