Bhed Bhari Hairani Hai

بھید بھری حیرانی ہے

بھید بھری حیرانی ہے

شام کی رنگت دھانی ہے

جُرم فقط اِس دنیا میں

امن سے رُو گردانی ہے

خوف بھرے ویرانے سے

واجب نقل مکانی ہے

چاند کو میں نے رات گئے

دن کی نظم سُنانی ہے

خود کو اچّھا لگتا ہوں

کیا یہ بھی نادانی ہے؟

جینے میں مشکل ہے بہُت

مرنے میں آسانی ہے

مَیں نے جو کی شعروں میں

وہ مشقِ غم خـوانی ہے

اُس کی آنکھ میں ہے کاجل

میری آنکھ میں پانی ہے

دشت میں جا کے دیکھا' سعیدؔ !

بے پایاں سُنسانی ہے

مبشر سعید

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(221) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Mubashir Saeed, Bhed Bhari Hairani Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 57 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.2 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Mubashir Saeed.