Lehlehati Hui Shadab Zameen Chahte Hain

لہلہاتی ہوئی شاداب زمیں چاہتے ہیں

لہلہاتی ہوئی شاداب زمیں چاہتے ہیں

اور کیا تجھ سے ترے خاک نشیں چاہتے ہیں

ہم کو منظور نہیں پھر سے بچھڑنے کا عذاب

اس لیے تجھ سے ملاقات نہیں چاہتے ہیں

کب تلک در پہ کھڑے رہنا ہے، اُن سے پوچھو

کیا وہ محشر کا تماشہ بھی یہیں چاہتے ہیں

وہ جو کھڑکی میں اُسی طرح جلاتے ہیں چراغ

کیا ہمیں آج بھی وہ پردہ نشیں چاہتے ہیں

کون وعدوں پہ ترے حشر تلک، ظلم سہے

تیرے بندے، تیرا انصاف یہیں چاہتے ہیں

اتنی اونچی ہے کہ اب بیل کا دم گُھٹتا ہے

جانے دیوار سے کیا گھر کے مکیں چاہتے ہیں

ممتاز گورمانی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(497) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Mumtaz Gurmani, Lehlehati Hui Shadab Zameen Chahte Hain in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 24 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.3 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Mumtaz Gurmani.