کوئی حد نہیں ہے کمال کی

کوئی حد نہیں ہے کمال کی

کوئی حد نہیں ہے جمال کی

وہی قرب و دور کی منزلیں

وہی شام خواب و خیال کی

نہ مجھے ہی اس کا پتہ کوئی

نہ اسے خبر مرے حال کی

یہ جواب میری صدا کا ہے

کہ صدا ہے اس کے سوال کی

یہ نماز عصر کا وقت ہے

یہ گھڑی ہے دن کے زوال کی

وہ قیامتیں جو گزر گئیں

تھیں امانتیں کئی سال کی

ہے منیرؔ تیری نگاہ میں

کوئی بات گہرے ملال کی

منیر نیازی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(368) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Munir Niazi, in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad, Social Urdu Poetry. Also there are 130 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.3 out of 5 stars. Read the Sad, Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Munir Niazi.