Yaado Ke Sayibaan Mein Busr Kar Rahi Hai Raat

یادوں کے سائباں میں بسر کر رہی ہے رات

نجمہ شاہین کھوسہ

یادوں کے سائباں میں بسر کر رہی ہے رات

نجمہ شاہین کھوسہ

MORE BY نجمہ شاہین کھوسہ

یادوں کے سائباں میں بسر کر رہی ہے رات

خاکے میں زندگی کے دھنک بھر رہی ہے رات

مجھ سے ہے ہم کلام یا تجھ سے ہے اس کی بات

ویران راستوں کا سفر کر رہی ہے رات

مدت سے جل رہے ہیں یہاں آس کے دئے

بجھتے چراغ کو بھی قمر کر رہی ہے رات

ان کی مہک ہے آج مرے دل سے دور کیوں

پھولوں سے جھولیوں کو اگر بھر رہی ہے رات

دل کو کیا ملول اور ویران آنکھ کو

کچھ یوں بھی جسم و جاں میں قدم دھر رہی ہے رات

رکھ کر ردائے عشق میں کچھ پھول اور خواب

شاہینؔ آج میری طرح مر رہی ہے رات

نجمہ شاہین کھوسہ

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(530) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Najma Shaheen Khosa, Yaado Ke Sayibaan Mein Busr Kar Rahi Hai Raat in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 39 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.1 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Najma Shaheen Khosa.