Khawab Dekhne Se Pehle

خواب دیکھنے سے پہلے

خواب دیکھنے سے پہلے

میں نے سونے سے انکار کر دیا تھا

اس جرم کی پاداش میں

تا بہ حیات

میری نیند اُڑا دی گئی

خواب دیکھنے سے پہلے

میں نے کھڑکیاں کھول دی تھیں

تاکہ نیند میں

دم گھٹنے کی اذیت سے بچ سکوں

اس جرم کی پاداش میں

میرے گرد

شیشے کی دیواریں کھڑی کر دی گئیں!

خواب دیکھنے سے پہلے

میں نے پنجرے میں قید

پرندوں کو آزاد کر دیا تھا

اس جرم کی پاداش میں

میرے گھر کے سارے درخت کاٹ دیے گئے!

خواب دیکھنے سے پہلے

میں نے خواب دیکھنا

اور درخت لگانے سے پہلے

ان کی چھاؤں میں بیٹھنا شروع کر دیا تھا

اس جرم کی پاداش میں

میری آنکھوں میں

ہمیشہ کے لیے دھوپ بھر دی گئی!

نصیر احمد ناصر

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(509) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Naseer Ahmed Nasir, Khawab Dekhne Se Pehle in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 28 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.2 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Naseer Ahmed Nasir.