Pata Nahi Yeh Nazm October Ki Hai Ya April Ki

پتا نہیں یہ نظم اکتوبر کی ہے یا اپریل کی!

ہم اکتوبر میں ملے

جب پتے درختوں سے

الگ ہونے کی تیاری کر رہے تھے

ہم اکتوبر میں ملے

جب دھوپ نرم پڑ چکی تھی

اور آسمان

سفید بادلوں کے مرغولوں سے

چمک رہا تھا

ہم اکتوبر میں ملے

جب پہاڑ

دور سے بھی صاف دکھائی دے رہے تھے

ہم اکتوبر میں ملے

جب پرندے

پانیوں سے ہم آغوش تھے

اور جھیلیں

ان کی پھڑپھڑاہٹ سے لبالب تھیں

ہم اکتوبر میں ملے

لیکن ہم اکتوبر میں جدا نہیں ہوں گے

کیوںکہ ہماری جڑیں

اپریل میں پیوست ہیں!

نصیر احمد ناصر

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(489) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Naseer Ahmed Nasir, Pata Nahi Yeh Nazm October Ki Hai Ya April Ki in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 28 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.4 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Naseer Ahmed Nasir.