Uthi Hai Dil Main Yeh Kaise Tarang Janti Hoon

اٹھی ہے دل میں یہ کیسی ترنگ، جانتی ہوں

اٹھی ہے دل میں یہ کیسی ترنگ، جانتی ہوں

کہاں پہ جا کے کٹے گی پتنگ ، جانتی ہوں

یہ کس کے لطف و کرم نے ہے تشنگی بخشی

ہے پور پور میں کیسی امنگ ، جانتی ہوں

اُتر رہی ہے مری روح پر یہ کس کی دھنک

چڑھا ہے دل پہ مرے کس کا رنگ، جانتی ہوں

غرورِ عشق نے بخشے ہیں مجھ کو یہ تیور

بدل رہے ہیں مرے رنگ، ڈھنگ، جانتی ہوں

کہاں کا سہل ہے ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ پندار کی نفی کرنا

درونِ ذات ۔۔۔ جو ہوتی ہے جنگ، جانتی ہوں

بدن پہ پھونکا ہے ۔۔۔۔۔۔۔۔۔ منتر کسی قلندر نے

رہے گا رقص میں اب انگ انگ، جانتی ہوں

زمانے بھر سے ہوئی بے نیاز، تیرے سبب

ترے کرم سے ہوا دل ملنگ ، جانتی ہوں

خبر ہے، در سے ترے اب یہ دل نہ جائے گا

کہیں بھی جاؤں کرے گا یہ تنگ، جانتی ہوں

یہ راستے ۔۔۔۔۔۔ یوںہی آساں نہیں ہوئے نسریںؔ

وہ چل رہا ہے مرے سنگ سنگ، جانتی ہوں

نسرین سید

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(434) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Nasreen Syed, Uthi Hai Dil Main Yeh Kaise Tarang Janti Hoon in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 54 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.8 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Nasreen Syed.