Dil Ka Har Zakhm Jawan Ho Tu Ghazal Hoti Hai

دل کا ہر زخم جواں ہو تو غزل ہوتی ہے

دل کا ہر زخم جواں ہو تو غزل ہوتی ہے

درد نس نس میں رواں ہو تو غزل ہوتی ہے

دل میں ہو شوق ملاقات کا طوفان بپا

اور رستے میں چناں ہو تو غزل ہوتی ہے

شوق حسرت کے شراروں سے جلا پاتا ہے

جان جاں دشمن جاں ہو تو غزل ہوتی ہے

کچھ بھی حاصل نہیں یک طرفہ محبت کا جناب

ان کی جانب سے بھی ہاں ہو تو غزل ہوتی ہے

شوکت فن کی قسم حسن تخیل کی قسم

دل کے کعبے میں اذاں ہو تو غزل ہوتی ہے

میں اگر ان کے خد و خال میں کھو جاؤں کبھی

وہ کہیں ناز کہاں ہو تو غزل ہوتی ہے

ناز خیالوی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1244) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Naz Khialvi, Dil Ka Har Zakhm Jawan Ho Tu Ghazal Hoti Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 5 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.6 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Naz Khialvi.