Tujhe Khalq Kehti Hai Khud Numa Tujhe Hum Se Kyun Yeh Hijaab Hai

تجھے خلق کہتی ہے خود نما تجھے ہم سے کیوں یہ حجاب ہے

تجھے خلق کہتی ہے خود نما تجھے ہم سے کیوں یہ حجاب ہے

ترا جلوہ تیرا ہے پردہ در تیرے رخ پہ کیوں یہ نقاب ہے

تجھے حسن مایۂ ناز ہے دل خستہ محو نیاز ہے

کہوں کیا یہ قصۂ راز ہے مرا عشق خانہ خراب ہے

یہ رسالہ عشق کا ہے ادق ترے غور کرنے کا ہے سبق

کبھی دیکھ اس کو ورق ورق مرا سینہ غم کی کتاب ہے

تری جذب میں ہے ربودگی تیرے سکر میں ہے غنودگی

نہ خبر شہود و وجود کی نہ ترنگ موج سراب ہے

یہ وہی ہے ساقیؔٔ شیفتہ جو ہے دل سے تیرا فریفتہ

یہ ہے تیرا بندہ گریختہ کہ جو خاکسار تراب ہے

پنڈت جواہر ناتھ ساقی

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1328) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of PANDIT JAWAHAR NATH SAQI, Tujhe Khalq Kehti Hai Khud Numa Tujhe Hum Se Kyun Yeh Hijaab Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 43 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.1 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of PANDIT JAWAHAR NATH SAQI.