Sad Poetry of Parveen Shakir - Sad Shayari

پروین شاکر کی اداس شاعری

تری چاہت کے بھیگے جنگلوں میں

Tri Chahat Ke Bheegay Junglon Mein

(Parveen Shakir) پروین شاکر

تتلیاں پکڑنے میں دور تک نکل جانا

Titliyan Pakarney Mein Daur Tak Nikal Jana

(Parveen Shakir) پروین شاکر

بوجھ اٹھاتے ہوئے پھرتی ہے ہمارا اب تک

Boojh Uthatay Howay Phurti Hai Hamara Ab Tak

(Parveen Shakir) پروین شاکر

بند کر کے مری آنکھیں وہ شرارت سے ہنسے

Band Kar Ke Meri Ankhen Woh Shararat Se Hansay

(Parveen Shakir) پروین شاکر

بس یہ ہوا کہ اس نے تکلف سے بات کی

Bas Yeh Howa Ke Is Ne Takalouf Se Baat Ki

(Parveen Shakir) پروین شاکر

بدن کے کرب کو وہ بھی سمجھ نہ پائے گا

Badan Ke Karb Ko Woh Bhi Samajh Nah Paye Ga

(Parveen Shakir) پروین شاکر

بارہا تیرا انتظار کیا

Barha Tera Intzar Kya

(Parveen Shakir) پروین شاکر

بات وہ آدھی رات کی رات وہ پورے چاند کی

Baat Woh Aadhi Raat Ki Raat Woh Poray Chand Ki

(Parveen Shakir) پروین شاکر

ایک مشت خاک اور وہ بھی ہوا کی زد میں ہے

Aik Masht Khak Aur Woh Bhi Howa Ki Zad Mein Hai

(Parveen Shakir) پروین شاکر

ایک سورج تھا کہ تاروں کے گھرانے سے اٹھا

Aik Sooraj Tha Ke Taron Ke Gharane Se Utha

(Parveen Shakir) پروین شاکر

اک نام کیا لکھا ترا ساحل کی ریت پر

Ik Naam Kya Likha Tra Saahil Ki Rait Par

(Parveen Shakir) پروین شاکر

اسی طرح سے اگر چاہتا رہا پیہم

Isi Terhan Se Agar Chahta Raha Pihm

(Parveen Shakir) پروین شاکر

اس نے مجھے دراصل کبھی چاہا ہی نہیں تھا

Is Ne Mujhe Darasal Kabhi Chaha Hi Nahi Tha

(Parveen Shakir) پروین شاکر

اس نے جلتی ہوئی پیشانی پہ جب ہاتھ رکھا

Is Ne Jalti Hoi Peshani Pay Jab Haath Rakha

(Parveen Shakir) پروین شاکر

ابر برسے تو عنایت اس کی

Abr Barsay To Inayat Is Ki

(Parveen Shakir) پروین شاکر

آمد پہ تیری عطر و چراغ و سبو نہ ہوں

Aamad Pay Teri Itar O Chairag O Subu Nah Hon

(Parveen Shakir) پروین شاکر

ہوائے تازہ میں پھر جسم و جاں بسانے کا

Hawaye Taza Main Phir Jism O Jaan Basanay Ka

(Parveen Shakir) پروین شاکر

ہوا مہک اٹھی رنگ چمن بدلنے لگا

Hہwa Mehak Uthi Rang Chaman Badalny Laga

(Parveen Shakir) پروین شاکر

اک ہنر تھا کمال تھا کیا تھا

Ik Hunar Tha Kamal Tha Kya Tha

(Parveen Shakir) پروین شاکر

گواہی کیسے ٹوٹتی معاملہ خدا کا تھا

Gawahi Kaisay Totati Mamla Khuda Ka Tha

(Parveen Shakir) پروین شاکر

چلنے کا حوصلہ نہیں رکنا محال کر دیا

Chalnay Ka Hosla Nahi Rokna Mahaal Kar Diya

(Parveen Shakir) پروین شاکر

جلا دیا شجر جاں کہ سبز بخت نہ تھا

Jala Diya Shajar Jaan Ke Sabz Bikhat Nah Tha

(Parveen Shakir) پروین شاکر

بادباں کھلنے سے پہلے کا اشارہ دیکھنا

Badbaan Khelnay Say Pehlay Ka Ishara Dekhna

(Parveen Shakir) پروین شاکر

وہ مجبوری نہیں تھی یہ اداکاری نہیں ہے

Woh Majboori Nahi Thi Yeh Adakari Nahi Hai

(Parveen Shakir) پروین شاکر

Records 1 To 24 (Total 44 Records)

Sad Shayari of Parveen Shakir - Poetry of Sad. Read the best collection of Sad poetry by Parveen Shakir, Read the famous Sad poetry, and Sad Shayari by the poet. Sad Nazam and Sad Ghazals of the poet. The best collection of Shayari by Parveen Shakir online. You can also read different types of poetries by the poet including Sad Shayari from different books of the poet.