بند کریں
شاعری عباس خلش

جب نہ کوئی خشک و تر موجود تھا

-

Jab na koi khushk o tar maojood tha


(2217) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان