بند کریں
شاعری عبدالحمید عدم

محبت کو کہاں فکر زیان و سود رہتا ہے

-

muhabbat ko kahan fikar


(389) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان