بند کریں
شاعری عابد علی عابد

دن ڈھلا، شام ہوئی، پھول کہیں لہرائے

-

Din dhala, sham hoi, phool kaheeN lehraey


(0) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان