بند کریں
شاعری حمیرا مریم

مرا لباس مرا بدن ہو گئی ہے تو

-

mera libas mera badan


(222) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان