بند کریں
شاعری عمرانہ مشتاق

میں نے اک بڑھیا کو دیکھا بیٹھی تھی جو نہر کنارے

-

main ne ik burhiya ko dekha


(227) ووٹ وصول ہوئے