بند کریں
شاعری کلیم حاذق

جنوں پیشہ تقدیر سے کھیلتا ہے

-

jinoon pesha taqdeer se khelta hai


(231) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان