بند کریں
شاعری مرزاداغ دہلویدیوان داغ

کبھی تڑپا کے دل پر ہاتھ رکھنا کبھی کہنا اسے یہ ہو گیا کیا

-

Kabhi tarpa key dil

مرزاداغ دہلوی

mirza daagh dehlvi

(151) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان