بند کریں
شاعری مرزاداغ دہلویدیوان داغ

وہ قتل کر کے مجھے ہر کسی سے پوچھتے ہیں

-

Who qattal kerkey


(197) ووٹ وصول ہوئے