بند کریں
شاعری مرزاداغ دہلویدیوان داغ

ظلم کس کس غریب پر نہ کیا

-

Zulm kis kis ghareeb


(190) ووٹ وصول ہوئے