بند کریں
شاعری مرزاداغ دہلوی

دل سے بھی باتیں نہیں کرتا کبھی میں اس لئے

-

Dil sey bhi bateen


(127) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان