بند کریں
شاعری معید مرزا

رات کہرے میں درختوں کو پروں سے باندھا

-

raat kohray me darakhton ko paron se bandha


(0) ووٹ وصول ہوئے