بند کریں
شاعری منیر ارمان نسیمی

تمام شہر ہی دشمن ہے کیا کیا جائے

-

tumaam shahir hi dushman hai kia kia jaye


(2421) ووٹ وصول ہوئے