بند کریں
شاعری ناطق جعفری

کہیں وہ منصب شایان شان پر ہوگا

-

kahin wo mansab shayan e shaan per ho ga


(255) ووٹ وصول ہوئے