بند کریں
شاعری قیوم طاہر

جانے کس خواب کی شبنم میں بھگوئے ہوئے ہم

-

jane kiss khawab ki shabnam main bhagoye hue hum


(190) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان