بند کریں
شاعری سعید عاصم

ملک کے رہبر و مختار نہیں ہو سکتے

-

mulk k rehbaroo mukhtar nahi ho sakte


(256) ووٹ وصول ہوئے