بند کریں
شاعری شاہد واسطی

مجھے کھینچ کے کہاں لے گیا

-

mujhe khench k kahan ley giya


(173) ووٹ وصول ہوئے