بند کریں
شاعری شہر یار

کھلے جو آنکھ کبھی دیدنی یہ منظر ہیں

-

khule ju ankh kabhi deedni


(273) ووٹ وصول ہوئے

: متعلقہ عنوان