بند کریں
شاعری تابش کمال

زندگی کی دھوپ میں درکار تھا سایا ہمیں

-

zindagi ki dhoop main darha tha saya hamain


(1678) ووٹ وصول ہوئے