بند کریں
شاعری زاہد شیخ

زندگی ظلم سہی، جبر سہی، بار سہی

-

zindagi zulam sahi jabar sahi bar sahi


(245) ووٹ وصول ہوئے