Silsala Chalta Rahe Ga

سِلسِلہ چلتا رہے گا

سلسلہ چلتا رہے گا میرے دل کے بعد بھی

جو نگر اجڑا ھےاب، تھا یہ کبھی  آباد بھی

اس قفس سے اس قدر مانوس طبیعت ھو گئی

چھوڑ کر جاوں  نہ ہرگز وہ کریں آزاد بھی

شب گزیدہ ھوں مجھے تاروں کی چھاوں سے ہے ڈر

دل کا خوں کرنے چلے آئے ہیں تیرا زاد بھی

مدتوں سے کوئی سندیسہ نہ آنے کی خبر

اب انہیں شائد ھی آتی ہو ہماری یاد بھی

چاند بھی جوبن پہ اپنے رات بھی مستی بھری

دور کوئی چھیڑ دے بنسی پہ اک فریاد بھی

کر دیا حالات کی چکی نے بھی شیریں کو چور

اور کچھ ھے خود غرض اس دور کا فریاد  بھی

نوجواں نے تلخئ حالات سے کی خود کشی

اور حسرت آگ میں جھونکی ہیں سب اسناد بھی

پروفیسر رشید حسرت

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1335) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Professor Rasheed Hasrat, Silsala Chalta Rahe Ga in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Birthday, Hope Urdu Poetry. Also there are 87 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Birthday, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Professor Rasheed Hasrat.