Kushada Rastoon Khule Jahanu Se Aa Raha Hoon

کشادہ رستوں کھلے جہانوں سے آرہا ہوں

کشادہ رستوں کھلے جہانوں سے آرہا ہوں

میں خاک کی سمت آسمانوں سے آرہا ہوں

ابھی تو آغاز جنگ ہے اور تمھیں خبر کیا

میں فتح کی سمت کن بہانوں سے آرہا ہوں

میں جانتا ہوں یہاں مرا کون ہے نشانہ

مجھے خبر ہے میں کن کمانوں سے آرہا ہوں

جو آگ اور آفتاب کو جانتے نہیں ہیں

میں ایسے تاریک تر مکانوں سے آرہا ہوں

بدلتا جاتا ہوں راستہ اور لباس شہزاد

میں اک زمانہ کئی زمانوں سے آرہا ہوں

قمر رضا شہزاد

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(389) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Qamar Raza Shahzad, Kushada Rastoon Khule Jahanu Se Aa Raha Hoon in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Birthday Urdu Poetry. Also there are 82 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.6 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Birthday poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Qamar Raza Shahzad.