Kabhi Aaisa Tu Kabhi Waisa Laga Rehta Hai

کبھی ایسا تو کبھی ویسا لگا رہتا ہے

کبھی ایسا تو کبھی ویسا لگا رہتا ہے

جس جگہ میں ہوں وہاں دھڑکا لگا رہتا ہے

خود سے اک بات بھی کرنے نہیں دیتا مجھ کو

میری جانب ، تیرا آئینہ لگا رہتا ہے

اتفاقاْ نکل آتی ہے کوئی شکل کہیں

کام سے ورنہ تو ہر تیشہ لگا رہتا ہے

لوٹ کر آتا ہے بکھرا ہوا ہر شام ڈھلے

کیسے دھندے میں دلِ سادہ لگا رہتا ہے

آتی جاتی ہوئی یادوں سے بھرا ہے رستہ

یہ جو آنکھیں ہیں یہاں میلہ لگا رہتا ہے

قیوم طاہر

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(578) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Qayyum Tahir, Kabhi Aaisa Tu Kabhi Waisa Laga Rehta Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 76 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.3 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Qayyum Tahir.