Koi Bhi Nahi Sheher Main Jab Zaat K Bahir

کوئی بھی نہیں شہر میں جب ذات کے باہر

کوئی بھی نہیں شہر میں جب ذات کے باہر

کیوں بھیڑ یہ رہتی ہے مکانات کے باہر

حیرانی و مدہوشی و تسکین و مسرت

کچھ بھی تو نہیں قصر طلسمات کے باہر

ہر وقت کی یہ خواب کی عادت نہیں اچھی

دیدار کو رعنائی دے ظلمات کے باہر

آزاد ہے وہ نفس کی تحویل میں راحتؔ

اور ہم ہیں گرفتار حوالات کے باہر

راحت حسن

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(354) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Rahat Hasan, Koi Bhi Nahi Sheher Main Jab Zaat K Bahir in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 32 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.2 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Rahat Hasan.