Tumahray Naam Par Mein Ne Har Aafat Sir Pay Rakhi Thi

تمہارے نام پر میں نے ہر آفت سر پہ رکھی تھی

تمہارے نام پر میں نے ہر آفت سر پہ رکھی تھی

نظر شعلوں پہ رکھی تھی زباں پتھر پہ رکھی تھی

ہمارے خواب تو شہروں کی سڑکوں پر بھٹکتے تھے

تمہاری یاد تھی جو رات بھر بستر پہ رکھی تھی

میں اپنا عزم لے کر منزلوں کی سمت نکلا تھا

مشقت ہاتھ پہ رکھی تھی قسمت گھر پہ رکھی تھی

انہیں سانسوں کے چکر نے ہمیں وہ دن دکھائے تھے

ہمارے پاؤں کی مٹی ہمارے سر پہ رکھی تھی

سحر تک تم جو آ جاتے تو منظر دیکھ سکتے تھے

دئیے پلکوں پہ رکھے تھے شکن بستر پہ رکھی تھی

راحت اندوری

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(655) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Rahat Indori, Tumahray Naam Par Mein Ne Har Aafat Sir Pay Rakhi Thi in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 98 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.7 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Rahat Indori.