Tum Apne Husn Pey Ghazalain Parha Karo Bethey

تم اپنے حسن پہ غزلیں پڑھا کرو بیٹھے

تم اپنے حسن پہ غزلیں پڑھا کرو بیٹھے

کہ لکھنے والے تو مدت سے ہوش کھو بیٹھے

ترس گئی ہیں نگاہیں زیادہ کیا کہیے

صنم صنم رہے بہتر خدا نہ ہو بیٹھے

خدا کے فضل سے تعلیم وہ ہوئی ہے عام

خرد تو خیر جنوں سے بھی ہاتھ دھو بیٹھے

برا کیا کہ تلاطم میں نا خدائی کی

کنارہ بھی نہ ملا ناؤ بھی ڈبو بیٹھے

مریض عشق کا جلدی جنازہ نکلے گا

کچھ اور دیر پتا پوچھتے رہو بیٹھے

تمام شہر میں بانٹی ہے درد کی خیرات

ہم اس کی دین کو دل میں نہیں سمو بیٹھے

تمہاری بزم بہت تنگ اور دشت وسیع

چلے تو آئے گھڑی دو گھڑی ہی گو بیٹھے

بجھی نہ آتش دل ہی کسی طرح راحیلؔ

وگرنہ یار تو آنکھیں بہت بھگو بیٹھے

راحیل فاروق

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(614) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Raheel Farooq, Tum Apne Husn Pey Ghazalain Parha Karo Bethey in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 19 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.8 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Raheel Farooq.