Daryaoon Main Rehte Hue Piyasa Tu Nahi HooN

دریاؤں میں رہتے ہوئے پیاسا تو نہیں ہوں

دریاؤں میں رہتے ہوئے پیاسا تو نہیں ہوں

پیاسا جو ہے مدت سے وہ صحرا تو نہیں ہوں

کیا جانئے دنیا میں تری ہوں کہ نہیں بھی

رہتے ہوئے موجود میں کھویا تو نہیں ہوں

وہ ساتھ مرے چاند ستارا ہے فلک ہر

اے دوست شب ہجر میں تنہا تو نہیں ہوں

تم وہم و گماں جان کے انجان نہ ہونا

اک ٹھوس حقیقت ہوں میں دھوکا تو نہیں ہوں

چاہے تو وہ ساحل سے کرے ایک اشارا

میں ڈوب رہا ہوں ابھی ڈوبا تو نہیں ہوں

تھا فیصلہ اس ترک وفاداری کا باہم

تم بھول گئے میں تمہیں بھولا تو نہیں ہوں

حیرت سے بھلا کیوں مجھے تکتا ہے زمانہ

اے پردۂ افلاک تماشا تو نہیں ہوں

رضیہ سبحان

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(3982) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Raziya Subhan, Daryaoon Main Rehte Hue Piyasa Tu Nahi HooN in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Sufi, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 14 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.3 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Sufi, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Raziya Subhan.