Aankhon Mein Kisi Yaad Ka Ras Ghol Rahi Hon

آنکھوں میں کسی یاد کا رس گھول رہی ہوں

آنکھوں میں کسی یاد کا رس گھول رہی ہوں

الجھے ہوئے پلو سے گرہ کھول رہی ہوں

وہ آئے خریدے مجھے پنجرے میں بٹھا دے

میں باغ میں مینا کی طرح بول رہی ہوں

ہر بار ہوا ہے مرے نقصان کا سودا

کہنے کو ہمیشہ سے میں انمول رہی ہوں

ریحانہ قمر

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(662) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Rehana Qamar, Aankhon Mein Kisi Yaad Ka Ras Ghol Rahi Hon in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 24 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.1 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Rehana Qamar.