Is Ka Chehra Bhi Sunata Hai Kahani Is Ki

اس کا چہرہ بھی سناتا ہے کہانی اس کی

اس کا چہرہ بھی سناتا ہے کہانی اس کی

چاہتی ہوں کہ سنوں اس سے زبانی اس کی

وہ ستم گر ہے تو اب اس سے شکایت کیسی

اور ستم کرنا بھی عادت ہے پرانی اس کی

بیش قیمت ہے یہ موتی سے مری پلکوں پر

چند آنسو ہیں مرے پاس نشانی اس کی

اس جفا کار کو معلوم نہیں وہ کیا ہے

بے مروت کو ہے تصویر دکھانی اس کی

ایک وہ ہے نظر انداز کرے ہے مجھ کو

ایک میں ہوں کہ دل و جاں سے دوانی اس کی

تم کو الفت ہے قمرؔ اس سے تو اب کہہ دینا

سامنے سب کے سنا دینا کہانی اس کی

ریحانہ قمر

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(856) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Rehana Qamar, Is Ka Chehra Bhi Sunata Hai Kahani Is Ki in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 24 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.9 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Rehana Qamar.