Iss Se Pehle K Koi In Ko Chura Ley Gin Lo

اِس سے پہلے کہ کوئی اِن کو چُرا لے، گِن لو

اِس سے پہلے کہ کوئی اِن کو چُرا لے، گِن لو

تُم نے جو درد کیے میرے حوالے، گِن لو

چل کے آیا ھُوں، اُٹھا کر نہیں لایا گیا مَیں

کوئی شک ھے تو مرے پاؤں کے چھالے گِن لو

جب مَیں آیا تو اکیلا تھا، گِنا تھا تُم نے

آج ھر سمت مرے چاھنے والے گِن لو

مکڑیو ! گھر کی صفائی کا سمَے آ پہنچا

آخری بار در و بام کے جالے گِن لو

زخم گننے ھیں اگر میرے بدن کے، یاراں !

تُم نے جو سنگ مِری سَمت اُچھالے، گِن لو

خُود ھی پھر فیصلہ کرنا کہ ابھی دن ھے کہ رات

شوق سے گِن لو اندھیرے، پھر اُجالے گِن لو

اب نہیں کرتا کسی پر بھی بھروسہ کوئی

گر نہیں مُجھ پہ یقیں، شہر میں تالے گِن لو

مَے کدے میں کئی مشکوک سے لوگ آئے ھیں

ان کو پِلوا دو مگر اپنے پیالے گِن لو

تُمہیں کرنی ھے گر احباب کی گنتی فارس !

آستینوں میں چُھپے دُودھ کے پالے گِن لو

رحمان فارس

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(848) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Rehman Faris, Iss Se Pehle K Koi In Ko Chura Ley Gin Lo in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 76 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.3 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Rehman Faris.