Badguman

بدگمان

تمہارے گلے میں

نئے خواب کے موتیوں کی سنہری سی مالا

ہماری نہیں ہے

سمندر وہ جس پر

تمہارے قدم کشتیاں ہوں

ہمیں صرف درس فنا ہے

ہمارے لیے تو

کسی اجنبی سی صدا کے بھنور سے نکلنا بھی ممکن نہیں ہے

ہمیں آشنا سی نگاہوں سے

سبزے میں لپٹی ہوا نے بلایا تو

ہم گر پڑیں گے

خزاں کے شجر سے

کوئی آخری پھول بن کر

ہمارے ہر اک آئینے کا تو شیوہ ہے بس

ٹوٹتے دل کے احساس سے ٹوٹ جانا

قیافہ لگانا

بھلا کون سی آنکھ نمکین سے جھوٹ کے پانیوں سے بھری ہے

بھلا کون سے ہونٹ شیرینیاں بانٹتے ہیں

شروعات چاہت میں ایسا قیافہ لگانا نہیں جانتے ہم

سعید احمد

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(490) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Saeed Ahmad, Badguman in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 22 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 5 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Saeed Ahmad.