Manzar Ki Oot Main

منظر کی اوٹ میں

بچے کو سینے سے لگائے

ھوا میں کچھ کھوجتی

وہ منظر سے پس منظر میں چلی جاتی ھے۔

جہاں اک پھولے فراک میں ننھی سی لڑکی

تتلی کے رنگوں سے

غنودگی میں بسی

کالی چٹی دنیا میں رنگ بھرتی ھے۔

رنگوں سے اکتا کر

ادھر ادھر بھاگتے لفظوں کو

روشنائی میں نہلاتی

سفید بستر پہ سلاتی

نظموں کے جگنووءں کی دموں میں روشنی بھرتی

صندلی دھوپ کو

سبک روی سے چلتے پانی میں ڈبوتی

دن بھر کے تھکے سورج کو آنکھوں میں بھر لیتی ھے۔

اچانک ھی

سامنے کا منظر انگڑائی لیتا ھے

دل میں بھاگتا لہو

منجمد ھوتا ھے۔

اسکے کانوں میں جملے سیسہ پگھلاتے ہیں۔

"یہ عورت ھے۔

اسکی سانسیں شمار کرتے رہو۔

اسے ایک بھی سانس ادھار مت دو۔

اسکی کوکھ اپنے کیڑوں سے آباد رکھو۔

جھوٹی محبتی تسلیوں کی آغوش میں سلائے رکھو۔

اسکی بیداری

ھماری طاقت کچل دے گی۔"

آستین میں پلتا سانپ

اسکے بدن پہ رینگنے لگا۔

عورت ممتا کے زیر اثر

زہر پیتی نیل و نیل ھو گئی

صفیہ حیات

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(450) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Safia Hayat, Manzar Ki Oot Main in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 80 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.2 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Safia Hayat.