Muhabbat Ishq Or Mazhab

"محبت ، عشق اور مذہب"

تم ڈیوڈ جارج

ملجا یوسف پر عاشق تھے۔

تمھیں خاردار جھاڑیوں کے پیچھے

لے جا کر ننگے بدن پیٹا گیا۔

ملجا کو سزا کے طور پہ

سرخ دوپٹے کی

سنہری کرن میں لپیٹ کر

سرحد پار کزن کے ہاتھ میں تھما دیا گیا۔

رات کے مہہ کش لمحوں میں

وہ چیختی جی بھر بھر روئی

"مجھے ہاتھ مت لگاوء

میں دو مذاہب کے بیچ کھڑی ھوں"

رائفل سے نکلی گولی

دونوں کے آر پار ھوئی۔

دونوں کے بدن سے سرخ سیال بہنے لگا۔

مرنے کے باوجود

ڈیوڈ سفید چوغا پہنے

صلیب پہ لٹکا تھا۔

ملجا کو

ایک رجسٹر کے کاغذ میں گاڑ دیا گیا۔

یہ

دو مزاہب کو دی گئی سزائیں تھیں۔

مگر محبت ھے کہ

عشق کا روپ دھارنے سے باز نہیں آتی

صفیہ حیات

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1084) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Safia Hayat, Muhabbat Ishq Or Mazhab in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 80 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.4 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Safia Hayat.