Peele Mosaam

پیلے موسم

وہ رستہ آج بھی

وہیں جاتا ھے

اس راہ کے سینے پہ اگا موڑ

منتظر کھڑا ھے

درخت کندھے کے ساتھ کندھا جوڑے

ندی کنارے

نیلے پانی کے آئنہ میں

دن بھر اپنا عکس دیکھتے

سرگوشیاں کرتے

ندی کے اس پار

سرسوں کے کھیت میں

بھوری آنکھوں والی لڑکی کو دیکھتے ھیں۔

زمزمہء کائنات کی دھن

لمحہ کی لے پہ

سر دھنتی

صدیوں کہنہ گیت گاتی ھے

وقت کا آنچل سرکتا

سارے حجاب سمیٹتامحو سفر رھتا ھے۔

لڑکی پھولوں سے لدی مہکی پگڈنڈی سے گزرتے

ہاتھ میں پکڑے سرسوں پھول

ندی کے حوالے کرتی

آنسو چھپاتی واپسی کی راہ لیتی ھے

سورج اسکو رستہ دیتے

تمسخر اڑاتا ھے

اونہہ۔۔۔۔

پیلے موسم میں

کون پلٹ کے آتا ھے۔۔؟

صفیہ حیات

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1574) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Safia Hayat, Peele Mosaam in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope Urdu Poetry. Also there are 80 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.6 out of 5 stars. Read the Love, Sad, Social, Friendship, Bewafa, Heart Broken, Hope poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Safia Hayat.