Mein Jis Jagah Hon Wahan Zindagi Moamma Hai

میں جس جگہ ہوں وہاں زندگی معمہ ہے

میں جس جگہ ہوں وہاں زندگی معمہ ہے

ابھی تو نوحہ ابھی دل نواز نغمہ ہے

ابھی حیات ابھی موت ابھی سکوں ابھی غم

یہ اسپتال کی دنیا عجیب دنیا ہے

ہر ایک نرس کے لب پر ہنسی سکھائی ہوئی

جو ڈاکٹر ہے وہ اپنے تئیں مسیحا ہے

بیان شوق کی صبحیں نہ عرض حال کی شام

بڑی اداس سی رہتی ہے اسپتال کی شام

سویرا آئے تو دل میں دبی دبی امید

پھر اس کے بعد وہی غم وہی ملال کی شام

میں چاہتا ہوں یہاں بھی ہمیشہ آتی رہیں

امید شوق کی صبحیں حسیں خیال کی شام

جو ہوں مریض انہیں راحت دکھائی دینے لگے

ہر اسپتال میں جنت دکھائی دینے لگے

سلام مچھلی شہری

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(458) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Salam Machchli Shehri, Mein Jis Jagah Hon Wahan Zindagi Moamma Hai in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Nazam, and the type of this Nazam is Social Urdu Poetry. Also there are 37 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.5 out of 5 stars. Read the Social poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Salam Machchli Shehri.