Dil O Dimagh Mein Ehsas Gham Ubhaar Diya

دل و دماغ میں احساس غم ابھار دیا

دل و دماغ میں احساس غم ابھار دیا

یہ کس نے آج مجھے مژدۂ بہار دیا

ترے جلو میں بڑھی ہے چمن کی شادابی

گلوں کا رنگ ترے حسن نے نکھار دیا

ذرا لبوں کے تبسم سے بزم گرمائیں

ہمیں تو آپ کی آنکھوں کی چپ نے مار دیا

وہ بار بار مجھے مہرباں نظر آئے

مجھے فریب نگاہوں نے بار بار دیا

تمہی کہو تمہیں کس کی نگاہ لے ڈوبی

مجھے تو خیر مری سادگی نے مار دیا

عجیب بات ہے دل ڈوب ڈوب جاتا ہے

عجیب رات ہے بجھتا ہے بار بار دیا

ہمیں وہ صاحب آلام دہر میں شہزادؔ

ذرا ہنسے تو زمانے کا غم نکھار دیا

شہزاد احمد

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(806) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Shahzad Ahmed, Dil O Dimagh Mein Ehsas Gham Ubhaar Diya in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 101 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.9 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Shahzad Ahmed.