Piyar Ke Rang Mehal Barson Main Tayar Howay

پیار کے رنگ محل برسوں میں تیار ہوئے

پیار کے رنگ محل برسوں میں تیار ہوئے

اور اک لمحے میں غائب در و دیوار ہوئے

پھر جو دیکھا تو وہاں کچھ بھی نہیں تھا موجود

ہم تو بس آنکھ جھپکنے کے گنہ گار ہوئے

ہم سیہ بختوں نے سورج نہیں دیکھا برسوں

صبح دم آنکھ لگی رات کو بے دار ہوئے

یہ بھی ممکن ہے کہ ہاتھ آئے کوئی اور زمیں

راہ گم کردہ اگر قافلہ سالار ہوئے

شہزاد احمد

© UrduPoint.com

All Rights Reserved

(1601) ووٹ وصول ہوئے

Your Thoughts and Comments

Urdu Nazam Poetry of Shahzad Ahmed, Piyar Ke Rang Mehal Barson Main Tayar Howay in Urdu. This famous Urdu Shayari is a Ghazal, and the type of this Nazam is Sad Urdu Poetry. Also there are 101 Urdu poetry collection of the poet published on the site. The average rating for this Urdu Shayari by our users is 4.9 out of 5 stars. Read the Sad poetry online by the poet. You can also read Best Urdu Nazam and Top Urdu Ghazal of Shahzad Ahmed.